in , ,

Bond Making & Breaking__ First Ever View

 

بانڈ بننے اور ٹوٹنے کا پہلا نظارہ-
کیمسٹری کی تاریخ میں پہلی دفعہ ایٹموں کے درمیان بانڈ بننے اور ٹوٹنے کا نظارہ کیا گیا ہے اور اسے ایک ویڈیو کی صورت میں ریکارڈ بھی کرلیا گیا ہے۔ یہ کارنامہ برطانیہ اور جرمنی کے سائنسدانوں کی مشترکہ ٹیم نے سرانجام دیا جس کی سربراہی پروفیسر یوٹی کیسر اور پروفیسر آندرے خلوبسٹوف کر رہے تھے۔ اس مقصد کے لیے ٹیم نے ٹرانسمشن الیکٹرون مائیکروسکوپی (TEM) کی ٹیکنیک استعمال کی۔ پروفیسر خلوبسٹوف کی زبانی:
“ہم نے گریفائٹ Graphite  کی بنی نینو ٹیوبز Nanotubes  کو استعمال کیا جو ایٹمز اور مالیکیولز کو پکڑنے، علیحدہ کرنے اور اپنی مطلوبہ جگہ پر رکھنے میں مدد کرتی ہیں۔ ان ٹیوبز میں ہم نے رینیم (Re) کے ڈائی اٹامک یعنی دو ایٹموں پر مشتمل ایک مالیکیول کو چھوڑا۔ رینیم اس وجہ سے کہ یہ ایک بڑا ایٹم ہوتا ہے اور اس کو ہلکے ایٹموں کی بنسبت آسانی سے الیکٹرون مائیکروسکوپ میں دیکھا جاسکتا ہے۔ ہم نے مشاہدہ کیا کہ رینیم کے دو ایٹم جو آپس میں بانڈ بنائے ہوئے تھے اور ان کا باہمی فاصلہ کافی کم تھا، گریفائٹ یعنی کاربن ایٹمز پر مشتمل نینو ٹیوبز کے ساتھ جڑ گئے۔ کاربن ایٹمز کے ساتھ بانڈ بنانے کی وجہ سے رینیم ایٹمز کا آپس کا بانڈ ٹوٹا اور ان کا فاصلہ بڑھ گیا، اور تھوڑی ہی دیر بعد ان کا فاصلہ پھر کم ہوگیا۔ یہ سارا نظارہ مرحلہ وار اس ویڈیو میں نظر آرہا ہے جس میں رینیم کے ایٹمز سیاہ دھبوں کی صورت میں فاصلہ بڑھاتے اور کم کرتے دکھائی دے رہے۔ ایٹمز کے لیول پر اس طرح کا مشاہدہ پہلی دفعہ ہوا ہے وگرنہ اس سے پہلے بانڈ بننے اور ٹوٹنے کو پڑھایا تو جاتا تھا لیکن اس کا دکھانا ممکن نہیں تھا۔”
یعنی اب اس تجربے اور اس کی ویڈیو کے بعد ہم کہہ سکتے ہیں کہ “جنگل میں مور ناچا، ہم نے دیکھا”۔

Written by admin

2 Comments

Leave a Reply
  1. Appreciate able those which can provide such a wonderful knowledge in simple words which can everyone understands without any problems….. Thanks for your response…

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Chemistry-11: Lecture#1 (1.1: ATOM)

1.1.1: Evidence of Atom ایٹم کا ثبوت